تازہ ترین

Post Top Ad

loading...

جمعرات، 8 جون، 2017

Chandni Jagmgati Rahi Rat Bhar - Ghazal



چاندنی جگمگاتی رہی رات بھر
نور اپنا لٹاتی رہی رات بھر

میری آمد کی اسکو خبر جو ہوئی
رت جگا وہ مناتی رہی رات بھر

مدتوں بعد کرکے ملاقات وہ
پیار مجھ پر لٹاتی رہی رات بھر
میں جو نکلا سفر پر سر شام ہی
ماں خدا کو مناتی رہی رات بھر

میں ہوں تیرے لئے تو مرے واسطے
یہ کہانی سنا تی رہی رات بھر

جب سے اس نے میرا تذکرہ سن لیا 
نام کی رٹ لگاتی رہی رات بھر

جب بھی اسعدؔ نے اس سے سنی داستاں 
نیند اسکو رلاتی رہی رات بھر

Post Top Ad

loading...